‘اگر مہنگائی قابو نہیں کر سکتے تو گھبرانے کی اجازت دے دیں’، لائیو کالر

اسلام آباد: وزیراعظم اسلامی جمہوریہ پاکستان عمران خان نے آج عوام سے براہ راست ٹیلی فون پر بات چیت کی اور ان کے سوالوں کے جوابات دیئے۔

آج فون پر بات چیت میں عوام نے وزیراعظم عمران خان کو اپنے مسائل سے آگاہ کیا، جس پر وزیراعظم عمران خان نے عوامی مسائل کو حل کرنے کی یقین دہانی کرائی۔

ٹیلی فون پر وزیر اعظم عمران خان سے سوال جواب کے اس سیشن میں اسلام آباد سے تعلق رکھنے والی امبرین نامی خاتون نے اپنے ایک سوال سے عمران خان کو لاجواب کر دیا۔

امبرین نامی خاتون نے اپنے ٹیلیفونک رابطے کے دوران وزیر اعظم عمران خان سے سوال کیا کہ “وزیر اعظم صاحب! اگر آپ مہنگائی کو کنٹرول نہیں کر سکتے تو براہ کرم ہمیں بر آنے کی اجازت دے دیں۔”

خاتون کالر کے اس بات پر پہلے تو وزیراعظم عمران خان مسکرائے اور اس کے بعد انہوں نے جواب دیا کہ اس میں کوئی شک نہیں کہ ملک پر مشکل وقت گزر رہا ہے۔

وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ زرعی ملک ہونے کے باوجود ہم ملک میں استعمال ہونے والی دال 70 فیصد باہر سے درآمد کر رہے ہیں۔

ایک دوسرے کالم میں وزیراعظم عمران خان سے سوال کیا کہ “ڈالر نیچے آرہا ہے اور روپیہ مستحکم ہو رہا ہے اس کے باوجود مہنگائی میں واضح فرق نظر نہیں آرہا۔”

وزیراعظم عمران خان نے اس شہری کے اس سوال کے جواب میں کہا کہ ہم اور ہماری ٹیم پوری کوشش کر رہی ہے کہ غریب عوام کو سستے داموں اشیائے ضروریہ کی فراہمی ممکن ہو سکے۔

شیئر کریں
براہ کرم ایڈ بلاکر کو غیر فعال کریں اور ہمارے ساتھ تعاون کریں.

 یا اس ویب سائٹ کو اپنے ایڈ بلاکر سے وائٹ لسٹ کریں. شکریہ

شیئر کریں
error: ڈیٹا کاپی رائٹ محفوظ ہے!