سپریم کورٹ نے کرک کے مسمار مندر کو 6 ماہ میں دوبارہ تعمیر کرنے کا حکم دے دیا

کرک: (ویب ڈیسک) ضلع کرک میں کچھ ماہ قبل مشتعل افراد کے ہاتھوں مسمار کیا گیا مندر کو چھ ماہ کے اندر دوبارہ تعمیر کیا جائیگا۔

خیبر پختونخواہ صوبے کے جنوبی ضلع کرک میں کچھ ماہ قبل مشتعل ہجوم کے ہاتھوں مسمار ہونے والے مندر کو سپریم کورٹ نے چھ ماہ کے اندر دوبارہ تعمیر کرنے کا حکم دے دیا ہے۔

اس بارے میں چیف جسٹس سپریم کورٹ جسٹس گلزار احمد نے ریمارکس دئے کہ ‘ایسے آدمی کو ٹھیکہ دیا گیا ہے کہ جس کے پاس کام شروع کرنے کے پیسے تک نہیں۔

جسٹس گلزار احمد نے مزید کہا کہ ‘ہندو برادری تعمیراتی کام میں مداخلت نہ کرے، سمادھی کی دوبارہ تعمیر ریاست کی ذمہ داری ہے۔’

سپریم کورٹ کے مطابق اس معاملے پر صوبہ خیبر پختونخواہ کے متعلہ محکمے خاموش ہیں۔ سپریم کورٹ نے مندر واقعے کی سماعت غیر معینہ مدت کیلئے ملتوی کر دی۔

شیئر کریں
براہ کرم ایڈ بلاکر کو غیر فعال کریں اور ہمارے ساتھ تعاون کریں.

 یا اس ویب سائٹ کو اپنے ایڈ بلاکر سے وائٹ لسٹ کریں. شکریہ

شیئر کریں
error: ڈیٹا کاپی رائٹ محفوظ ہے!